کون سا سیاستدان کتنے اثاثوں کا مالک ہے، تفصیلات جاری کر دی گئیں؟

 

 

الیکشن کمیشن نے عمران خان کے سال 2021 کے اثاثوں کی تفصیلات جاری کر دی ہیں جس کے مطابق سال 2020 کے مقابلے میں عمران خان کے سال 2021 کے اثاثوں میں 6 کروڑ روپے سے زائد کا اضافہ ہوا ہے۔

دستاویز کے مطابق پی ٹی آئی چئیرمین عمران خان 5 کروڑ روپے سے زائد کے اثاثوں کے مالک ہیں۔ 142.1 ملین 2020 میں، اثاثوں کی کل مالیت روپے سے زیادہ تھی۔
سال 2020 میں قرض کی رقم سمیت، اثاثوں کی مالیت روپے سے زیادہ تھی۔ 150 ملین سال 2021 کے اثاثوں کے مطابق عمران خان کسی چیز کے ذمہ دار نہیں ہیں۔

عمران خان نے اپنے بیانات میں زمان پارک، میانوالی اور بھکر میں وراثتی زمین ظاہر کی ہے جب کہ بنی گالہ گھر کو تحفہ ظاہر کیا ہے۔ عمران خان کا گرینڈ حیات اسلام آباد ٹاور میں ایک کروڑ روپے مالیت کا فلیٹ ہے۔ 119 ملین

دستاویز کے مطابق پی ٹی آئی چیئرمین عمران خان کا اندرون یا بیرون ملک کوئی کاروبار نہیں، عمران خان کے پاس اپنی گاڑی نہیں، عمران خان کا بینک بیلنس 63 کروڑ روپے سے زائد ہے، پی ٹی آئی چیئرمین کے دو ڈالر اکانٹس میں میرے پاس 3 لاکھ 29 ہزار ڈالر ہیں۔

عمران خان نے اپنے اثاثوں میں 2 لاکھ روپے مالیت کے 4 بکرے بھی ظاہر کیے ہیں۔ چیئرمین پی ٹی آئی کے پاس 500,000 روپے کا فرنیچر ہے۔

بشری بی بی

دستاویز کے مطابق عمران خان نے اپنی اہلیہ بشری بی بی کے اثاثوں کی تفصیلات بھی جمع کرائیں۔ بشری بی بی کی پاکپتن میں 431 کنال پر مشتمل دو مختلف زمینیں ہیں جبکہ بشری بی بی کے پاس بنی گالہ اسلام آباد میں 3 کنال کا گھر بھی ہے۔ ۔

وزیر اعظم شہباز شریف

دستاویز کے مطابق وزیراعظم شہباز شریف 245 ملین روپے سے زائد کے اثاثوں کے مالک ہیں جب کہ ان پر 14 ملین روپے سے زائد کے مقروض ہیں۔ شہباز شریف نے سلمان شہباز سے 6 کروڑ روپے سے زائد کا قرضہ لیا ہے۔

شہباز شریف کے پاس دو گاڑیاں اور 2 کروڑ روپے سے زائد کا بینک بیلنس ہے۔ شہباز شریف بیرون ملک بھی 137.4 ملین روپے کے اثاثوں کے مالک ہیں۔ شہباز شریف کے اثاثوں میں سال 2020 کے مقابلے 2021 میں 3 لاکھ روپے کی کمی ہوئی۔

 

 

نصرت شہباز اور تہمینہ درانی

شہباز شریف نے اپنی اہلیہ نصرت شہباز اور تہمینہ درانی کے اثاثے بھی ظاہر کئے۔ نصرت شہباز اربوں روپے کے اثاثوں کی مالک ہیں۔ 23 کروڑ جبکہ تہمینہ درانی 20 کروڑ روپے کے اثاثوں کی مالک ہیں۔

سپیکر قومی اسمبلی

راجہ پرویز اشرف نے اپنے اثاثوں کی مالیت 23.6 ملین بتائی جب کہ پرویز اشرف کی اہلیہ کے پاس 100 ٹن سونا ہے۔

راجہ پرویز اشرف نے اسلام آباد کے پوش سیکٹر ایف ایٹ میں گھر کی قیمت صرف 26 لاکھ بتائی جبکہ راجہ پرویز اشرف نے وراثت میں ملنے والی 32 ایکڑ اراضی کی قیمت نہیں بتائی۔

چیئرمین پیپلز پارٹی بلاول بھٹو

پیپلز پارٹی کے چیئرمین اور وزیر خارجہ بلاول بھٹو 1.6 ارب روپے کے اثاثوں کے مالک ہیں جبکہ بلاول بھٹو 334,000 روپے کے مقروض ہیں۔

بلاول بھٹو نے بیرون ملک بھی اپنا کاروبار دکھایا ہے۔ بلاول بھٹو کا بینک بیلنس 120 ملین سے زائد ہے۔

آصف علی زرداری

سابق صدر آصف علی زرداری کروڑوں روپے سے زائد کے اثاثوں کے مالک ہیں۔ 71.42 کروڑ جبکہ آصف زرداری کا بیرون ملک کوئی کاروبار نہیں ہے۔

شاہ محمود قریشی

پی ٹی آئی کے وائس چیئرمین شاہ محمود قریشی 219.6 ملین روپے کے اثاثوں کے مالک نکلے، ان کے اثاثے عمران خان سے بھی زیادہ ہیں۔

پی ٹی آئی رہنما مراد سعید

مراد سعید کا اپنا کوئی گھر نہیں ہے لیکن ان کے پاس گاڑی اور 15 تولے سونا ہے۔ مراد سعید کے پاس اربوں روپے سے زائد رقم ہے۔ ان کے کھاتوں میں 29 لاکھ 63 ہزار روپے ہیں۔

عمر ایوب

عمر ایوب 1.19 ارب روپے سے زائد کے اثاثوں کے مالک ہیں جبکہ ان پر 1.155 ملین روپے واجب الادا ہیں۔ عمر ایوب نے اپنے بیرون ملک کاروبار کی تفصیلات بھی جمع کرائیں۔

سابق سپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر

اسد قیصر 85 لاکھ روپے سے زائد کے اثاثوں کے مالک ہیں جبکہ 11.7 ملین روپے سے زائد کے مقروض ہیں۔ سابق سپیکر اسد قیصر کے اثاثوں کی مالیت 67.2 ملین روپے ہے۔

اسد قیصر نے 58 لاکھ روپے کا بزنس ظاہر کیا، ان کے پاس ایک گاڑی ہے اور ان کا بینک بیلنس 96 لاکھ روپے سے زائد ہے۔

سابق وزیر دفاع پرویز خٹک

پی ٹی آئی رہنما پرویز خٹک 167.1 ملین روپے سے زائد کے اثاثوں کے مالک ہیں، جب کہ ان پر 3 کروڑ روپے کا بینک بیلنس اور 25.6 ملین روپے کا قرض ہے۔

دیگر سیاسی رہنما

شہریار آفریدی کے اثاثوں کی مالیت 26.2 ملین روپے ہے جبکہ ڈپٹی سپیکر زاہد درانی 37.2 ملین روپے کے اثاثوں کے مالک بتائے جاتے ہیں۔

وزیر مواصلات مولانا اسد محمود کے اثاثوں کی مالیت 60 لاکھ روپے ہے جبکہ وزیر مواصلات مولانا اسد محمود کی اہلیہ کے پاس صرف 3 ٹن سونا ہے۔

علی امین گنڈا پور کے 100 ملین روپے سے زائد کے اثاثے ہیں جبکہ پیر نور الحق قادری کے اثاثوں کی مالیت 51 کروڑ روپے ہے۔ روپے کا قرضہ ہے۔

میجر طاہر صادق 59.3 ملین روپے کے اثاثوں کے مالک ہیں، جبکہ ملک سہیل کمڈیال 31 کروڑ روپے سے زائد کے اثاثوں کے مالک ہیں۔ غلام سرور خان 54.7 ملین روپے کے اثاثوں کے مالک ہیں۔

سابق وزیر داخلہ شیخ رشید احمد کروڑوں روپے کے اثاثوں کے مالک ہیں۔ 159.8 ملین جبکہ شیخ رشید احمد نے 2000 روپے مالیت کی بندوق دکھائی۔ 630,000 شیخ رشید احمد نے ایک کروڑ روپے ایڈوانس لے لیے۔

 

امیگریشن سے متعلق سوالات کے لیے ہم سے رابطہ کریں۔

کینیڈا کا امیگریشن ویزا، ورک پرمٹ، وزیٹر ویزا، بزنس، امیگریشن، سٹوڈنٹ ویزا، صوبائی نامزدگی  .پروگرام،  زوجیت ویزا  وغیرہ

نوٹ:
ہم امیگریشن کنسلٹنٹ نہیں ہیں اور نہ ہی ایجنٹ، ہم آپ کو RCIC امیگریشن کنسلٹنٹس اور امیگریشن وکلاء کی طرف سے فراہم کردہ معلومات فراہم کریں گے۔

ہمیں Urduworldcanada@gmail.com پر میل بھیجیں۔

    Jobs Hiring

    ویب سائٹ پر اشتہار کے لیے ہم سے رابطہ کریں۔

    اشتہارات اور خبروں کیلئے اردو ورلڈ کینیڈا سے رابطہ کریں    9946622  (825)  1+   یا اس ایڈریس پرمیل کریں
     urduworldcanada@gmail.com

    رازداری کی پالیسی

    اردو ورلڈ کینیڈا کے تمام جملہ حقوق محفوظ ہیں۔ ︳    2023 @ urduworld.ca